ایک نئ نظم

کوئ امیدکا روشن دیا ھوتا ھے

کسی نے چاند اور ستاروں کو

اپنی آنکھوں میں سیا ھوتا ھے

تم ان سب سے بڑی خوشی ھو

یوں ھرغم کو خود میں سمولینا

اندھیرےمیں مجسم روشنی ھو

اپنےکو جلا کہ سب کو دکھادینا

مانندخواب ھوگی زندگی تمھاری

مایوسی کے اندھیرےکو مٹا دینا

کاش سبھی کو مکمل. جہاں ملتا

ھوتی جو دنیا بھی افسانہ دلربا

دن ھوتاعید شب کوشبستاں ملتا